امریکہاولمپکسایرانپاکستانجاپانچینشام

اولمکپ کمیٹی نے شوٹر “جواد فروغی” کے خلاف ایرانی تنظیم سے ثبوت مانگ لیے

عالمی اولمپک کمیٹی (آئی او سی) نے ایران سے تعلق رکھنے والے شوٹر “جواد فروغی” کیخلاف مہم چلانے والی تنظیم کو چیلنج کرتے ہوئے ثبوت فراہم کرنے کا حکم دے دیا۔

جواد فروغی نے کچھ روز قبل ہی ٹوکیو اولمپکس میں شوٹنگ کے مقابلوں میں ایران کیلئے طلائی تمغہ اپنے نام کیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں: ایرانی کارکنوں نے پاسداران انقلاب کے رکن کا طلائی تمغا جیتنے کو تباہی قرار دے دیا

طلائی تمغہ جیتنے کے بعد “یونائیٹد فار نوید” نامی تنظیم نے اولمپک کمیٹی کو جواد فروغی کیخلاف تحقیقات اور اُن کے جیتے ہو ئے طلائی تمغے کو معطل کرنے کا مطالبہ کیا تھا۔

تنظیم کا یہ مؤقف ہے کہ فروغی نے مبینہ طور پر ملک شام میں سپاہ پاسداران انقلاب اسلامی ( Islamic Revolutionary Guard Corps) میں نرس کی حیثیت سے خدمات انجام دی ہیں، جسے امریکا نے سن 2019 میں ایک دہشت گرد تنظیم قرار دیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں: ٹوکیو اولمپکس: چین نے میزبان جاپان کو مات دے کر اہم اعزاز اپنے نام کرلیا

آئی او سی کے ترجمان مارک ایڈمز کا کہنا ہے کہ اگرتنظیم کے پاس اس حوالے سے کوئی ثبوت ہیں تو وہ ہمیں فراہم کرے۔

مناظر:
29۔

مزید دکھائیے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ خبریں

Back to top button

اپنا ایڈ بلاکر تو بند کر دیں

آواز ، آزادی صحافت کی تحریک کا نام ہے جو حکومتوں کی مالی مدد کے بغیر خالص عوامی مفادات کی خاطر معیاری صحافتیاقدار کی ترویج کرتا ہے اپنے پسندیدہ صحافیوں کی مدد کے لئے آواز کو اپنے ایڈ بلوکر سے ہٹا دیں