پاکستانلاہور

راولپنڈی میں 27 سال بعد قتل کا اشتہاری ملزم گرفتار

ملزم گرفتاری سے بچنے کے لیے ہر چھ ماہ بعد حلیہ تبدیل کرتا تھا

ملزم گرفتاری سے بچنے کے لیے ہر چھ ماہ بعد حلیہ تبدیل کرتا تھا

راولپنڈی: تھانہ چونترہ پولیس نے قتل کے مقدمہ میں انتہائی مطلوب اشتہاری کو 27 سال بعد گرفتار کرلیا۔

ملزم گرفتاری سے بچنے کے لیے ہر چھ ماہ بعد حلیہ تبدیل کرتا تھا، مقدمہ میں 6 ملزمان پہلے ہی گرفتارہوچکے ہیں، انہوں نے دیرینہ دشمنی پر اکتوبر 1995 میں دو افراد کو قتل کردیا تھا، پولیس کا کہنا تھاکہ 27 سال بعد گرفتار ہونے والا ملزم محمد تاج اپنی شناخت چھپانے اور حلیہ تبدیل کرنے کا ماہر ہے۔

ملزم نے اپنے دیگر چھ ساتھیوں کے ساتھ مل کر دو افراد محمد آزاد اور محمد اقبال کو قتل کردیا تھا اور ملزمان فرار ہوگئے تھے، چونترہ پولیس نے محمد تاج کے دیگر ساتھیوں کو گرفتار کرلیا تھا جبکہ مرکزی ملزم روپوش ہوگیا تھا۔

عدالتی کارروائی کے بعد ملزم کو دوہرے قتل کے مقدمہ میں اشتہاری قرار دیا گیا تھا اور ملزمان کی گرفتاری کے لیے کوششیں جاری تھیں، گزشتہ روز پولیس نے محمد تاج کو گرفتار کیا اور اسلحہ بھی برآمد کرلیا، ملزم کو عدالت میں پیش کرکے ریمانڈ حاصل کیا جائے گا۔

مزید دکھائیے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ خبریں

Back to top button

اپنا ایڈ بلاکر تو بند کر دیں

آواز ، آزادی صحافت کی تحریک کا نام ہے جو حکومتوں کی مالی مدد کے بغیر خالص عوامی مفادات کی خاطر معیاری صحافتیاقدار کی ترویج کرتا ہے اپنے پسندیدہ صحافیوں کی مدد کے لئے آواز کو اپنے ایڈ بلوکر سے ہٹا دیں